جمعہ، 9 نومبر، 2012

اردو بلاگنگ کیسے کریں ؟


 اردو بلاگنگ کیسے کریں ؟

(یہ پوسٹ ان ہندستانی بھائیوں کے لیے تحریر کی گئی  ہے جو اردو بلاگنگ تو کرنا چاہتے ہیں لیکن اس بات سے واقف نہیں ہے کہ بلاگنگ کیسے کی جاتی ہے )

آج کل اردو بلاگنگ کا رجحان زور پکڑ رہا ہے ۔ اردو بلاگنگ پہلے پاکستان تک ہی محدود تھی لیکن اب وقت کے ساتھ ساتھ ہندوستانی اردوداں حضرات بھی اردو بلاگنگ میں دلچسپی لینے لگے ہیں۔ اکثر احباب کے ساتھ میرا اردو بلاگنگ کے موضوع پر تبادلہ خیال ہوتا رہتا ہے اور بہت سارے لوگ یہ کہتے  ہیں کہ ہم  کمپیوٹر اور بلاگنگ کی باریکیوں سے واقف نہیں  ہیں اس لیے  بلاگنگ  نہیں کر پاتے۔

جہاں تک باریکیوں کا سوال ہے تو مجھے  اردو کمپیوٹنگ اور بلاگنگ میں  سرے سے کوئی  باریکی  نظر ہی نہیں آتی۔ آج ہر چیز آپ کے لیے تیار ہے۔ بلال بھائی نےپاک اردو انسٹالر تیار کیا ہے جو محض چند کلک کے ساتھ آپ کے کمپیوٹر کو ( بہترین نستعلیق رسم الخط میں ) ارد وپڑھنے اور لکھنے کے قابل بنا دیتا ہے ۔  بلوگر آپ کو ٹیمپلیٹ ایڈٹ کرنے کی سہولت فراہم کرتا ہے  ، اور ماشاءاللہ بہت سارے احباب روز بروز  بلاگر کے لیے نت نئی ٹیمپلیٹس کو اردو سانچے میں ڈھال رہے ہیں۔ ان میں سے کسی ایک ٹیمپلیٹ کا انتخاب کر نے کے بعد آپ کو بلاگر میں اپلوڈ کرنا ہے اور آپ بلاگنگ کے لیے بالکل تیار ہو جاتے ہوں۔
سہولت کے لیے ہم آپ کو   درج ذیل عنوانات کت تحت سمجھانے کی کوشش کرینگے۔
اپنے کمپیوٹر کو اردو پڑھنے اور لکھنے کے قابل بنانا
اردو کے لیے یونیکوڈ فونٹس تیار ہونے سے پہلے ہم کمپیوٹر میں  اردو  کا استعمال تصویری انداز میں کرتے تھے   یہ اردو نہیں بلکہ اردو کی تصاویر ہوتی ہے جنہیں کمپیوٹر کا نظام نہ ہی سمجھ سکتا ہے اور نا ہی سرچ انجن اسے ڈھونڈ کر آپ تک نتائج پہنچا سکتا ہے۔ یونیکوڈ فونٹس کی تیاری کے ساتھ ہم اس قابل ہو گئے ہیں کہ کسی بھی اپلیکیشن میں ہم بہترین اردو رسم الخط میں اردو تحریر کر سکتے ہیں۔ اپنے کمپیوٹر کو اردو لکھنے اور پڑھنے کے قابل بنانے کے لیے تین چیزوں کی ضرورت ہوتی ہیں۔
1۔ اردو  یونیکوڈ فونٹس
2۔ اردو کی بورڈ
3۔ ونڈوز کے لیے اردو سپورٹ
یہ تینوں چیزیں مشہور بلاگر بلال صاحب نے ایک جگہ جمع کی ہے اور پاک اردو انسٹالر نام سے ایک سوفٹ ویئر تیار کیا ہے جس کی مدد سے محض چند کلک کی بناء پر ہمارا کمپیوٹر اردو لکھنے اور پڑھنے کے لائق بن جاتا ہیں۔
کمپیوٹر میں اردو تحریر کرنے کا طریقہ
فرض کیجیے آپ کو ایم ایس وردڈ میں اردو تحریر کرنی ہے۔
ایم ایس ورڈ  کا صفحہ کھولیں ، اب   Alt=Shift دبا کر اردو زبان منتخب کریں۔
اب فونٹس میں آپ کا اردو فونٹ بھی ظاہر ہونے لگے گا۔ اردو فونٹس میں کوئی بھی فونٹ منتخب کریں اور بہترین اردو رسم الخط میں تحریر کرنا شروع کریں۔
تحریر کرنے کے دوران یہ بات ملحوظ رہے کہ پاک اردو انسٹالرمیں فونیٹک کی بورڈ شامل کیا گیا ہے۔ لھٰذا اردو تحریر بھی آپ کو فونیٹک کی بورڈ کے لحاظ سے ہی کرنی ہوگی جو انتہائی آسان ہے۔
اردو بلاگنگ کیسے کریں ؟
بلاگر اور ورڈ پریس دو مشہور ویب سائٹس ہے جو آپ  کو مفت بلاگ کی خدمات مہیا کرتے ہیں۔ اس کے علاوہ بھی اور بہت ساری ویب سائٹس ایسے ہیں  جہاں آپ اپنا بلاگ مفت شروع کر سکتے ہیں۔ ٹمبلر ایک ایسی سوشل ویب سائٹ ہے جسے آپ  ٹوئٹر ، فیس بک اور بلاگر یا ورڈ پریس کا مرکب کہ سکتے ہیں ۔ یہ سوشل ویب سائٹ آپ کو بیک وقت تقریباً   وہ تمام خصوصیات عطا کرتی ہے  جو فیس بک ٹوئٹر اور بلاگر میں موجود ہے۔ ٹمبلر ٹوئٹر کی طرح ہے لیکن وہاں حروف کی قید نہیں ہے ، آپ اپنے دوستوں کے ساتھ اپنا مواد شیئر کرنے کے لیے فیس بک کی طرح کی خصوصیات استعمال کر سکتے ہیں اور مزید یہ آپ کو اپنے بلاگ کی ایچ ٹی ایم ایل ایڈت کرنے کی بھی اجازت دیتا ہے لیکن فی الحال  یہ ویب سائٹ برصغیر ہند میں یہ اتنی مقبول نہیں ہوئی ہے۔
چونکہ بلاگر ایچ ٹی ایم ایل ایڈٹ کرنے کی سہولت عطا کرتا ہے اور یہ نسبتاً آسان ہے اس لیے ہم یہاں بذریعہ بلاگر ہی بلاگنگ پرگفتگو کریں گے۔
سب سے پہلے آپ کو www.blogger.com   پر اپنا بلوگ بنانا ہوگا ۔ یہ انتہائی آسان ہوتا ہے ۔ گوگل سے سائن ان 
کرنے کے بعد محض چند کلکس کے ساتھ بلاگر آپ کو نیا بلاگ تیار کر دیتا ہے۔


دوسرا مرحلہ اردو بلاگز کے لیے اردو سانچے کا ہوگا ۔ جو لوگ اپنے بلاگ کو نستعلیق رسم الخط میں دیکھنا پسند کرتے ہیں انہیں ایسی ٹیمپلیٹ اپلوڈ کرنی ہوتی ہے جس میں اردونستعلیق فونٹ شامل ہو۔
آجکل بلاگر کے لیے بہت سارے اردو سانچے دستیاب ہے ہم نے بھی دو تین سانچے ابھی تک اس بلاگ پر پوسٹ کیے ہیں ۔ مزید سانچے مندرجہ ذیل ویب سائٹس سے حاصل کئے جا سکتے ہیں۔



یہ سانچے ڈاونلود کرنے کے بعد  آپ کو ان سانچوں کو بلاگر میں اپلوڈ کرنا ہوگا۔



بلاگر ڈیش بورڈ میں جا کر ٹیمپلیٹ پر کلک کیجیے۔


اب آپ کو دائیں طرف    back up/ Restore   آپشن نظر آئیگا۔


اب اس پر کلک کرنے کے بعد آپ کو درج ذیل نظر آئیگا۔


اب آپ کو  Choose file  پر کلک کرنا ہے اور اس کے بعد اپنا منتخب کردہ ارو سانچہ اپلوڈ کرناہے۔

ایک بار سانچہ اپلوڈ ہونے کے بعد آپ کا بلاگ دلکش نستعلیق رسم الخط کے ساتھ بلاگنگ کے لیے تیار ہو جاتا ہے۔
اب اگر آپ نے ایم ایس ورڈ میں کوئی مضمون تحریر کیا ہو اور اسے پوسٹ کرنا چاہتے ہیں یا براہ راست بلوگر میں کوئی تحریر پسٹ کرنہ ہے تو New Post  پر کلک کریں اور اپنی پوسٹ شائع کریں۔

اگر آپ سی ایس ایس سے تھوڑی بہت واقفیت رکھتے ہیں تو آپ خود بلاگر سانچوں کو اردو میں ڈھال سکتے ہیں۔ یہ بھی بہت آسان ہوتا ہے اور  اس میں آسانی یہ ہیکہ بہت ساری ویب سائٹس پر بلاگر کے ہزاروں سانچے مفت استعمال کی سہولت کے ساتھ وجود ہیں آپ اپنے من پسندسانچوں کا انتخاب کرنے کے بعد انہیں اردو پیرہن پہنا سکتے ہیں۔یہ سانچے آپ مندرجہ ذیل ویب سائٹس سے مفت صاصل کر سکتے ہیں۔
بلاگر کے اردو سانچوں میں اردو فونٹ شامل کرنے کے لیے   ٹیمپلیٹ میں جہاں کہیں فونٹ کا تذکرہ  ہو وہاں آپ کو اردو فونٹس شامل کرنے ہوتے ہیں۔ مثلاً
body {
            margin:0 auto;
            padding:0px 0px 0px 0px;
            background:#212121  url(http://2.bp.blogspot.com/-JbDQlnDRmD0/UGURHndf9mI/AAAAAAAAGtc/BvPZenzpNsY/s1600/body.png);
            font-family: Arial, verdana,Tahoma,Century gothic,  sans-serif;
            font-size:16px;
         text-align:right;
          line-height: 1.5em;
کی بجائے آپ کو اس طرح اردو فونٹ شامل کرنے ہوگے۔
body {
            margin:0 auto;
            padding:0px 0px 0px 0px;
            background:#212121  url(http://2.bp.blogspot.com/-JbDQlnDRmD0/UGURHndf9mI/AAAAAAAAGtc/BvPZenzpNsY/s1600/body.png);
            font-family:"Jameel Noori Nastaleeq","Alvi Nastaleeq", Arial, verdana,Tahoma,Century gothic,  sans-serif;
            font-size:16px;
         text-align:right;
          line-height: 1.5em;

ایک بار آپ بلوگنگ شروع کر یں اور دل میں شوق ہو تو یہ باریکیاں کوئی معنیٰ نہیں رکھتی۔ تو دیر کس بات کی قارئین آپ کے بلاگ کا انتظار کر رہے ہیں ۔ فوراً سے پیشتر نیا بلاگ بنائیے۔





15 تبصرے:

  1. اگرچہ میرا بلاگ ورڈ پریس میں ہے ،لیکن بلاگر کے بارئے میں جان کر مجھے بھی بلاگر پر بلاگ بنانے کا شوق پیدا ہوگیا۔

    ٹمبلر کا اگر مزید تعارف ہو جائے تو کیا ہی اچھا ہوگا۔

    جواب دیںحذف کریں
  2. درویش خراسانی صاحب ٹمبلر واقعی ایک پیاری ویب سائٹ ہے جہاں مختلف ویب سائٹس کی خصوصیات یکجاں کر دی گئی ہے۔ ٹوئٹر کے بالمقابل یہ آپ کو Macro blogging کی بھی سہلت فراہم کرتا ہے ۔ ٹوئٹر کی طرز پر فالورز کا سلسلہ ہوتا ہے۔اس سوشل نیٹ ورکنگ ویب سائٹس پر آپ کی پسٹس ایک بلاگ کی شکل اختیار کر لیتی ہیں۔ اور مزید آپ اس کا یچ ٹی ایم ایڈت کرتے ہئے حسب منشاء ترتیب دے سکتے ہیں۔ یہ خصوصیت تا حال کسی اور سوشل نیٹ ورکنگ ویب سائٹ میں موجود نہیں ہے۔

    جواب دیںحذف کریں
  3. بہت بہت شکریہ سیف بھائی۔۔آپ نے ایک بڑی مشکل کا حل بتا دیا۔۔

    جواب دیںحذف کریں
  4. آپ کے بلاگ کی مادد سے میں اپنا بلاگ بنا نے میں کا میا ب ھو گی ھوں شکر یہ
    میرے لئے دعا کریں ک سچ لکھوں اور اچھا لکھ سکو یہ سب آ پ لوگوں کی محنت کے
    سبب ھو سکا ہے ورنہ میں اس قا بل نہیں ۔

    جواب دیںحذف کریں
  5. اس قدر معلوماتی تحریر کے لیے بہت شکریہ۔
    غالباً بنگلور کے شعیب صاحب کا بلاگ ، بلاگ اسپاٹ پر ہندوستان کا اولین اردو بلاگ تھا اور ہمارے علم کے مطابق تو شعیب صاحب ہی پہلے ہندوستانی اردو بلاگر ہونے کا اعزاز رکھتے ہیں۔
    دوسرے نمبر کے ہندوستانی اردو بلاگر ہونے کا دعویٰ ہم نے دائر کر رکھا ہے (ہر چند کہ ابھی کوئی ایوارڈ نہیں ملا اس بات پر) ۔۔۔
    ابھی آپ کی اسی تحریر پر یاد آیا کہ ۔۔۔ بلاگ اسپاٹ پر ہماری اردو بلاگنگ کے ماشاءاللہ اسی ماہ پورے پانچ سال مکمل ہو چکے ہیں۔
    ہمارے بلاگ کی پہلی تحریر یہاں موجود ہے
    آج سے ہم یہاں ۔۔۔۔۔
    اور اس تعارف کا بھی ضرور مطالعہ فرمائیں
    بلاگ کا تعارف

    جواب دیںحذف کریں
  6. جناب حیدر آبادی صاحب !
    ہمیں پتہ ہیں " صرف باتاں نئی کرتیں حیدرابادی لوگاں ، کاماں بی کرتیں بڑے بڑے "
    آپ کے بلاگ پر بارہا حضری ہوئی لیکن خاموش آمین بالجہر کہتے ہوئے چلے آئے کوئی تبصرہ کی زحمت نہیں کی۔
    شاید آپ کی ہی کوئی پوسٹ ہمارے مضمون مایوسی کفر ہے
    کا سبب بنی تھی۔ اس بلاگ کی ابتداء تو غالباً 2007 میں کی گئی تھی تب رومن اردو میں سیفس سٹفف کے نام سے یہ بلاگنگ کی جاتی تھی لیکن مختلف مراحل سے گذرنے کے بعد اب اسے باقاعدہ یونیکوڈ اردو بلاگ بنا دیا گیا ہے۔
    تصویری اردو کے لیے اس بندے کا بلاگنقوش سخن کافی مشہور ہے جس کے ازٹرز کی تعداد 90
    ہزار سے متجاوز کر گئی ہے۔

    اردو بلاگنگ کے پانچ سال مکمل کرنے پر دلی مبارکباد قبول ہو ۔ انشاءاللہ ہم محکمہ آثار قدیمہ سے سفارش کرینگے کہ چار مینار کی دیواروں پر اعزازی طور پر آپ کا نام چسپاں کیا جائے۔ :ڈ

    جواب دیںحذف کریں
  7. ذرہ نوازی عامر صاحب اور اسمٰعیل صاحب !

    محترمہ ہماری دعائیں آپ کے ساتھ ہیں، اللہ آپ کی تحاریر کو افشائے حق کا ذریعہ بنائے ، آمین

    جواب دیںحذف کریں
  8. ڈاکٹر صاحب
    نئے بلاگرس کو اگر اردو سیارہ ایگریگیٹر کے ساتھ بھی متعارف کروا دئں تو امید ہے کہ ایک تو انکی ڈھارس بندھی رہے گی ،دوسری بات یہ کہ بلاگرز کے جھرمٹ میں شامل ہوجائیں گے ،نیز ہمیں بھی انکے نئے پوسٹس آسانی سے پڑھنے کیلئے ملیں گے۔

    جواب دیںحذف کریں
  9. اچھی کوشش ہے، جاری رکھیں اور میری اردو ویب سائٹ کے لیے بھی مشوروں سے نوازیں،
    www.urdutoday.com

    جواب دیںحذف کریں
  10. بہت اچھی کوشش ہے جاری رکھیں، میری وئب سائٹ کے لیے بھی مشوروں سے نوازیں، شکریہ
    www.urdutoday.com

    جواب دیںحذف کریں
  11. م ہت اچھی کوشش ہے جاری رکھیں، میری وئب سائٹ کے لیے بھی مشوروں سے نوازیں، شکری
    http://usmanmustafvi.blogspot.com/2014/08/inqlab-aur-sunat-e-rasool.html

    جواب دیںحذف کریں

غیر اخلاقی و مضمون سے مناسبت نہ رکھنےوالے تبصرے حذف کر دیے جاتے ہیں۔ اسی طرح ذاتیات پر تنقید و نظریاتی اختلافات کی بناء پر انتہا پسندی والے تبصرے بھی شامل نہیں کئے جائیں گے۔